ناروے: نازیوں سے متاثر،مسجد میں فائرنگ کرنے والے شخص کو 21 سال قید

ناروے میں مسجد میں فارئرنگ کرنے والے شخص کو عدالت نے 21 سال قید کی سزا سنا دی ہے۔فرانسیسی خبر رساں ادارے کے مطابق ملزم پر الزام عائد تھا کہ انہوں نے مسجد میں فائرنگ کی تاہم انکی فائرنگ سے کوئی جابحق نہیں ہوا۔
ناروے میں مسجد میں فارئرنگ کرنے والے شخص کو عدالت نے 21 سال قید کی سزا سنا دی ہے۔فرانسیسی خبر رساں ادارے کے مطابق ملزم پر الزام عائد تھا کہ انہوں نے مسجد میں فائرنگ کی تاہم انکی فائرنگ سے کوئی جابحق نہیں ہوا۔___فوٹو اے ایف پی

ناروے میں مسجد میں فارئرنگ کرنے والے شخص کو عدالت نے 21 سال قید کی سزا سنا دی ہے۔فرانسیسی خبر رساں ادارے کے مطابق ملزم پر الزام عائد تھا کہ انہوں نے مسجد میں فائرنگ کی تاہم انکی فائرنگ سے کوئی جابحق نہیں ہوا۔

تفصیلات کے مطابق ناروے میں مسجد میں فارئرنگ کرنے والے شخص کو عدالت نے 21 سال قید کی سزا سنا دی ہے۔فرانسیسی خبر رساں ادارے کے مطابق ملزم پر الزام عائد تھا کہ انہوں نے مسجد میں فائرنگ کی تاہم انکی فائرنگ سے کوئی جابحق نہیں ہوا۔

جمعرات کو اوسلو کے مغرب میں واقع عدالت نے 22سالہ مجرم فلپ مینشوس کو 21سال قید کی سزا سنائی اور اس کے لیے ناروے کی ایک اصطلاح کا اسعمال کیا گیا جس میں مجرم کو غیرمعینہ مدت تک سزا دی جا سکتی ہے

تبصرے