ایک آذان پر بائیس موذن قربائیں،سلام اے شہیدوں،مشعال ملک

حریت رہنما یاسین ملک کی اہلیہ مشعال ملک کا کہنا ہے کہ تیرہ جولائی 1931 کو ڈوگرا راج نے اسلام دشمنی کی تاریخ رقم کی۔
حریت رہنما یاسین ملک کی اہلیہ مشعال ملک کا کہنا ہے کہ تیرہ جولائی 1931 کو ڈوگرا راج نے اسلام دشمنی کی تاریخ رقم کی۔

حریت رہنما یاسین ملک کی اہلیہ مشعال ملک کا کہنا ہے کہ تیرہ جولائی 1931 کو ڈوگرا راج نے اسلام دشمنی کی تاریخ رقم کی۔

تفصیلات کے مطابق مشعال ملک نے یوم شہدائے کشمیر پر شہدا جموں و کشمیر کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے اپنے ایک بیان میں کہا کہ ایک اذان اور 22 موزن، سلام فرزندان اسلام سلام، سرینگر جیل کے باہر اللہ اکبر کی صدا بلند کرنے والے ہمارے ہیرو ہیں۔مشعال ملک نے کہا کہ اذان کے ایک ایک لفظ کی ادائیگی پر 22 مسلمان قربان ہوئے جبکہ مقبوضہ کشمیر میں آج بھی اللہ کا نام لینے والےجانیں دے رہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ دنیا نے بوسینیائی مسلمانوں کے قتل عام پر خاموشی کی طرح آج بھی چپ سادھ رکھی ہے، ہر روز شہادتیں جذبہ حریت کو پروان چڑھا رہی ہیں۔مشعال ملک نے مزید کہا کہ افسوس، نانا کی نعش پر بیٹھا بچہ بھی عالمی ضمیر کو جھنجھوڑ نہ سکا۔

تبصرے