ایبٹ آباد:کورونا وائرس کے شعبے میں کئے جانے والے ٹیسٹوں کی رپورٹ میں تاخیر

ایبٹ آباد:کورونا وائرس کے شعبے میں کئے جانے والے ٹیسٹوں کی رپورٹ میں تاخیر
ایبٹ آباد:کورونا وائرس کے شعبے میں کئے جانے والے ٹیسٹوں کی رپورٹ میں تاخیر

ایبٹ آباد میں کورونا وائرس کے شعبے میں کئے جانے والے ٹیسٹ کی رپورٹ میں تاخیر ہونے لگی ہے۔جس کی وجہ سے مریضوںکو مشکلا ت کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔

ذرائع کے مطابق بے نظیر ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹر ہسپتال اور ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفس سے کورونا کے تشخیصی ٹیسٹ پشاور بھجوانے کے نو دن بعد رپورٹ موصول ہو رہی ہے جس سے داخل مریضوں کے آپریشن بھی التوا کا شکار ہو رہے ہیں۔ایبٹ آباد میں کورونا کیسز کی شرح میں اضافہ کے بعد بھی حکومتی سطح پر فوری ایکشن کے بجائے سست روی کا عمل شروع ہوگیا ہے۔اس حوالے سے ایبٹ آباد ایوب میڈیکل کمپلیکس میں کورونا لیب میں 4 سو مریضوں کے ٹیسٹ کئے جارہے ہیں جب کہ بے نظیر ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹر ہسپتال کے مریضوں کے ٹیسٹ خیبر میڈیکل کمپلیکس پشاور بجھوائے جارہے ہیں جن کی فوری ایک روز میں رپورٹ کے بجائے ہفتہ سے اوپر کا وقت صرف ہو رہا ہے جو مریضوں کے علاوہ طبی عملہ کے لئے بھی تشویش کا باعث ہے۔اسی طرح ڈی ایچ کیو میں داخل مریضوں کے آپریشن بھی کورونا ٹیسٹ رپورٹ کے باعث تاخیر کا شکار ہورہے ہیں۔پروانشل ڈاکٹرز ایسوسی ایشن خیبر پختون خوا کے نائب صدر ڈاکٹر راحیل نے بھی ٹیسٹوں کی رپورٹ میں تاخیر پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے بتایا کہ کورونا کے شعبے میں ٹیسٹوں کی فوری رپورٹ موصول نہ ہونے طبی عملہ کی زندگیوں کو بھی خطرات لاحق ہو رہے ہیں اور فرنٹ لائن پر لڑنے والے اپنی زندگیوں سے ہاتھ دھو رہے ہیں اور متاثرہ مریضوں کے وائرس سے عملہ بھی اس کا شکار ہو رہا ہے۔انہوں نے حکومت سے اپیل کی ہے وہ اس معاملے کا نوٹس لیں اور کورنا کے تشخیصی ٹیسٹوں کی فوری رپورٹ کو یقینی بنائیں بصورت دیگر اضلاع کی سطح پر صوبہ بھر میں احتجاج کریں گے۔

تبصرے