براڈشیٹ سے اشرافیہ کی تحقیقات رکوانے والوں سے شفافیت چاہتے ہیں، وزیرِاعظم عمران خان

پہلے پانامہ اور اب براڈشیٹ نے حکمران اشرافیہ کو بے نقاب کیا۔

اسلام آباد، وزیرِاعظم عمران خان نے ٹویٹ تھریڈ میں کہا کہ عالمی انکشافات کے بعد حکمران اشرافیہ خود کو ’انتقام‘ کارڈ کی آڑ میں نہیں چھپا سکتی۔ انہوں نے کہا کہ پہلے پانامہ اور اب براڈشیٹ نے حکمران اشرافیہ کی بڑے پیمانے پر منی لانڈرنگ اور کرپشن کو بے نقاب کیا ہے۔ انکا کہنا تھا کہ یہ اشرافیہ اقتدار حاصل کر کے ملک کو لوٹتے ہیں،پھر اپنی ناجائز دولت کو منی لانڈرنگ کے ذریعے بیرونِ ملک بھجوا دیتے ہیں اور پھر سیاسی اثرورسوخ استمعال کر کے این آراو حاصل کرتے ہیں۔

وزیرِاعظم عمران خان نے کہا کہ یہ لوٹ مار سے جمع کی ہوئی دولت کو محفوظ بنانے کے لئے عوام کے ٹیکس کا پیسہ استمعال کرکے ملک اور قوم کا نقصان کرتے ہیں۔ انکا کہنا تھا کہ یہ انکشافات تو محظ ایک جھلک ہیں۔ اُنہوں نے یہ بھی کہا کہ براڈشیٹ سے اشرافیہ کی تحقیقات رکوانے والوں کے حوالے سے مکمل شفافیت چاہتے ہیں۔
جبکہ براڈ شیٹ کے سی ای او کاوے موسوی کا کہنا ہے کہ نیب پاکستانی عوام سے جھوٹ بول رہا ہے۔ انکا کہنا تھا کہ لندن ہائی کورٹ کے جج کے مطابق نیب نے براڈ شیٹ کی کوششوں میں رکاوٹ پیدا کرنے کی کوشش کی۔

تبصرے