الیکشن کمیشن پر کسی بھی بڑے آدمی کا کوئی بھی اثر نہیں ہے،چیف الیکشن کمشنر سکندرسلطان راجہ

سکندر سلطان راجہ(چیف الیکشن کمشنر) نے اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ کوئی بھی بڑا آدمی ہو الیکشن کمیشن کو اس چیز سے کوئی بھی فرق نہیں پرے گا۔

سکندر سلطان راجہ(چیف الیکشن کمشنر) نے اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ کوئی بھی بڑا آدمی ہو الیکشن کمیشن کو اس چیز سے کوئی بھی فرق نہیں پرے گا۔

چیف الیکشن کمشنر سکندرسلطان راجہ کی سربراہی میں 5رکنی کمیشن نے وفاقی وزیر فیصل واوڈا کے خلاف نااہلی کی درخواستوں پر سماعت کی۔ درخواست گزار قادر مندوخیل نے کہا کہ فیصل واوڈا کے خلاف ریٹرننگ افسر کے پاس کاغذات نامزدگی چیلنج کیے تھے۔ریٹرننگ افسر نے فیصل واوڈا کیس میں جھوٹ بولا ہے ۔الیکشن کمیشن ریٹرننگ افسر بلائے اور پوچھ تاج کرے اور الیکشن کمیشن سے فیصل واوڈا کی تفصیلات وزارت خارجہ سے منگوائی جائیں ۔فیصل واوڈا کے وکیل نے ایک بار پھر اعتراض اٹھا دیا۔ فیصل واوڈا کے خلاف نااہلی کی درخواستیں الیکشن کمیشن کے اختیار میں نہیں ہے ۔فیصل واوڈا کے خلاف اسلام آباد ہائیکورٹ میں بھی نااہلی کی درخواستیں دائر ہوئی ہیں۔چیف الیکشن کمشنر نے وفاقی وزیر کے وکیل سے استفسار کیا کہ جب کاغذات نامزدگی جمع کرائے تھے ،کیا اس وقت فیصل واڈا کے پاس دہری شہریت تھی؟ جس پر فیصل واوڈا کے وکیل نے کہا کہ جب کاغذات نامزدگی جمع کرائے اس وقت فیصل واوڈا کے پاس امریکا کی شہریت نہیں تھی۔ کاغذات نامزدگی جمع کرانے سے پہلے فیصل واوڈا کے پاس دہری شہریت تھی۔ بتائیں فیصل واوڈا نے شہریت کب چھوڑی؟ وکیل بولے اس کے لیے مرکزی کونسل سے ہدایات لینا پڑیں گی۔ ممبر پنجاب نے کہا کہ اگر آپ کو معلوم نہیں تو یہاں کیا لینے آئے ہیں، آپ لوگوں کے ایسے کاموں سے ہمیں باتیں سننا پڑ رہی ہیں۔

تبصرے