پولیس میں اصلاحات لانے میں کون رکاوٹ ہے؟ادارہ خود یا سیاستدان؟

پولیس میں اصلاحات لانے میں کون رکاوٹ ہے؟ادارہ خود یا سیاستدان؟
پولیس میں اصلاحات لانے میں کون رکاوٹ ہے؟ادارہ خود یا سیاستدان؟

اسلام آباد میں اسامہ ستی جوان کو پولیس کی جانب سے گولیاں مار کر قتل کردیا گیا اس کے بعد کل ہی فیصل آباد میں بھی ایسا ہی واقعہ سامنے آیا جس میں ایک شہری کو پولیس اہلکاروں نے گولیاں مار دیں

اسلام آباد(ویب ڈیسک):یہ بہت المیہ ہے کہ جب بھی پاکستان میں کوئی ایسا واقعہ جس میں نہتے شہریوں کو پولیس کی جانب سے گناہ قتل کردیا جاتا ہے اس کے ساتھ ہی میڈیا اور ہر کوئی یہ ذکر شروع کردیتا ہے کہ پولیس میں اصلاحات کیوں نہیں لائی جاتی؟کیوں میڈیا اس معاملے میں تکرار سے کام نہیں لیتا؟میڈیا کو بھی ایسے واقعات چاہیئے پھر ہی موضوع بنایا جائیگا؟خیبر یہ تو میڈیا کی بات ہے دوسری جانب ہمارے حکمران ہیں۔

پاکستان تحریک انصاف کی حکومت آئی اس سے پہلے عمران خان کی تقاریر کس نے نہیں سن رکھی تھیں جس میں انہوں نے عوام سے وعدہ کیا تھا کہ پولیس میں اصلاحات لائیں گے مگر اب اس حکومت کو ڈھائی سال کا عرصہ ہوگیا مگر پولیس اصلاحات ذرہ برابر بھی نظر نہیں آئی ۔

ا ب یہ چہ مگوئیاں جاری ہیں کہ آئی ایس پی آر کی طرز میں پولیس میں بھی ایک نظام لایا جائیگا جس سے پولیس اصلاحات کی بنیاد رکھیں گے مگر اب دیکھنا یہ ہے کہ معاملہ حقیقت کا روپ دھارے گا یا نہیں

یاد رہے کہ کل فیصل آبادمیں افسوسنا ک واقعہ پیش آیا جس میں شہری وقاص کو پولیس کی جانب سے گولیاں مار کر قتل کردیا گیا۔بتایا جارہا ہے معمولی تلخ کلامی پر پولیس نے شہری پر گولیاں چلائیں۔

تبصرے