نابینا بن کر 10 لاکھ پاؤنڈ کمانے والی خاتون کو سزا

نابینا بن کر 10 لاکھ پاؤنڈ کمانے والی خاتون کو سزا
نابینا بن کر 10 لاکھ پاؤنڈ کمانے والی خاتون کو سزا

انگلینڈ:مانچسٹر میں اھیڑ عمر خاتون 15 سال سے نابینا ہونے کا ڈھونگ رچاتی رہی اور تقریبا 10 لاکھ پاؤنڈ بھی کما لیئے

خبر کچھ یوں ہے کہ انگلینڈ کے شہر مانچسٹر میں ایک خاتون جس کی عمر 65 اور نام کرسٹینا ہے یہ خاتون 15 سال تک نابینا بننے کا ڈھونگ رچاتی رہی جس سے انہوں نے 10 لاکھ پاؤنڈ حکومت کی امداد کی مد میں حاصل کیئے جو ماہانا اوسطا 13 ہزار پاؤنڈ بنتے ہیں

غیر ملکی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق کرسٹینا نے ایک عام برطانوی شہری کی تنخواہ کے مقابلے میں ماہانہ پانچ گناہ زیادہ رقم وصول کی

کرسٹینا گرفتار کیسے ہوئی؟

کرسٹیینا اس وقت سیکیورٹی اداروں کی نظروں میں آگئیں جب انہیں سی سی ٹی وی کیمروں میں اخبار اور اپنے پوتے کو اسکول سے لیکر آتے ہوئے دیکھا گیا جس کے فوری بعد خاتون کو گرفتار کرلیا گیا

دس لاکھ پاؤنڈ کا کیا کیا؟

خاتون نے عدالت میں اپنا موقف اپنایا کہ انہہوں نے اس پیسے سے بیشتر سیاحتی مقامات کا دورہ کیا، اپنی جلد کی سرجری کرائی اور کپڑے خریدے

تاہم عدالت نے خاتون اور اسکی بیٹی کو بھی سزا سنادی ہے۔عدالت کا کہنا ہے اتنی بڑی رقم والدہ کے پاس تھی مگر بیٹی نے پولیس کو مطلع نہیں کیا

تبصرے